کوئٹہ، دالبندین میں خودکشی کے واقعات: خاتون و بچوں سمیت چھ افراد ہلاک

224

کوئٹہ میں خاتون نے زہر کھاکر اپنی اور اپنے بچوں کی زندگی کا خاتمہ کردیا جبکہ دالبندین میں نوجوان نے اپنی زندگی کا خاتمہ کردیا۔

تفصیلات کے بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ کے علاقے ہزارہ ٹاؤن میں خاتون نے اپنی چار بچوں کو زہر کھلا کر خودکشی کرلی ہے-

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس ٹیمیں جائے وقوعہ پر پہنچ گئے جبکہ جانبحق افراد کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے-

زہر کھانے سے خاتون تین بچوں سمیت جانبحق جبکہ ایک بچی کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے-

کوئٹہ پولیس کے مطابق واقعہ سے ایسے لگتا ہے کہ خاتون نے پہلے بچوں کو زہر کھلائی اور پھر خود زہر کھا کر جان کی بازی ہارگئی، تاہم پولیس نے تاحال واقعہ کے وجوہات ظاہر نہیں کئے ہیں-

پولیس کے مطابق واقعہ کی تحقیقات جاری ہے تفصیلات شائع کئے جائینگے-

دوسری جانب دالبندین سے تعلق رکھنے والا اور کلی نور محمد کے رہائشی قدرت اللہ نامی نوجوان نے غربت سے تنگ آکر اپنی زندگی کا خاتمہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق قدرت اللہ اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان تھا مگر میرٹ نا ہونے کی وجہ سے ہر بار محکمے کے لیے اپلائی کی مگر منتخب نہیں ہوا۔

خیال رہے کہ بلوچستان بھر میں خودکشی کے واقعات روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ ہورہے ہیں۔

گذشتہ چار ہفتوں میں خودکشی کا یہ گیارواں واقعہ ہے اس سے قبل ضلع گوادر، خضدار، آواران، حب چوکی اور سبی میں بھی خودکشی کے اطلاعات دی بلوچستان پوسٹ کو موصول ہوئیں۔