بلوچستان اور سندھ سے پیاز کی درآمد میں قلت

291

بلوچستان اور سندھ کی فصلوں سے پیاز کی محدود آمد اور یکم جنوری سے اہم درآمدی اشیائے خوردونوش پر اضافی ٹیکس کی وجہ سے کراچی میں پیاز 250 روپے سے زائد فی کلو میں فروخت ہونے لگا جبکہ پاکستان کے دیگر علاقوں میں 200 سے 320 روپے فی کلو کے درمیان فروخت کیا جانے لگا۔

رپورٹ کے مطابق حساس ادارہ شماریات کے مطابق 26 جنوری کو ختم ہونے ہفتے میں پیاز کی مجموعی قیمتیں 200 سے 320 روپے فی کلو تھی جو اس سے قبل 5 جنوری کو ختم ہونے والے ہفتے کے دوران 180 سے 280 روپے میں فروخت ہورہے تھے، اسلام آباد میں پیاز 260 سے 320 روپے فی کلو میں فروخت ہورہے ہیں جو اب تک کی سب سے زیادہ قیمت ہے۔بندرگاہ پر پھنسے پیاز کے 600 سے 700 کنٹینرز میں سے صرف کچھ کنٹینرز ہی مارکیٹ میں پہنچ سکے جس کی وجہ سے قیمتوں میں کافی زیادہ اضافہ نظر آیا۔

آل فروٹ اینڈ ویجی ٹیبل ایکسپورٹرز، امپورٹرز اینڈ مرچنٹ ایسوسی ایشن پیٹرن ان چیف وحید احمد نے بتایا کہ پیاز کی درآمدی ٹیکس پر درآمد کنندگان فی کلو پیاز پر 18 سے 20 روپے اضافی ٹیکس ادا کررہے ہیں جو 31دسمبر 2022 تک صفر تھا۔

اس کے علاوہ افغانستان اور ایران سے پیاز کی آمد بھی روک دی گئی کیونکہ وہاں فصلوں کے مسائل ہیں تاہم صارفین اپنے روزمرہ کی خوراک مصر، ترکیہ اور چینی پیاز سے تیار کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بلوچستان اور سندھ کی فصلوں سے ماہانہ ڈیڑھ لاکھ ٹن پیاز موصول ہوتی تھی تاہم اب صرف 25 سے 30 ہزار ٹن آرہی ہے۔

وحید احمد نے بتایا کہ کم از کم ایک لاکھ ٹن پیاز نرخوں کو مستحکم یا نیچے لا سکتے ہیں۔

انہوں نے خدشہ ظاہر کیا کہ پیاز کی قیمتوں میں تیزی کا رجحان برقرار رہ سکتا ہے کیونکہ روپے کی قدر میں کمی اور پیٹرولیم مصنوعات اور ڈیزل کی قیمتوں میں ممکنہ اضافے کے درمیان ٹرانسپورٹ کی اخراجات میں اضافہ ہوگا۔

انہوں نے الزام لگایا کہ بینک درآمد کنندگان کی حمایت کررہے ہیں جبکہ دیگر درآمدی دستاویزات جاری کرنے اور لیٹر آف کریڈٹ کھولنے میں تاخیر حربے استعمال کررہے ہیں،اس کے نتیجے میں کچھ کنٹینر کو کلیئر کردیا گیا،دیگر کنٹینر ایک ماہ سے زائد عرصے سے پھنسے ہوئے ہیں جس سے خوراک کا معیار متاثر ہورہا ہے۔

وحید احمد نے بتایا کہ پیاز کی قیمتوں میں اضافے کی ایک اور وجہ یہ ہے کہ بینک حکام ڈالر کے اضافی نرخوں پر جرمانے عائد کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مارچ تک پیاز کی قیمتوں میں اضافہ برقرار رہے گا۔انہوں نے کہاکہ کراچی میں پاکستانی پیاز کا ہول سیل ریٹ میں پیاز 170 سے 180 روپے فی کلو جبکہ ریٹیلر میں منافع خوری کی جارہی ہے اس صورتحال میں عام شہری بے بس دکھائی دے دیتی ہے۔