نیوزی لینڈ کو شکست دیکر آسٹریلیا پہلی بار ٹی ٹوئنٹی چیمپئن بن گیا

53

دبئی میں کھیلے جارہے آئی سی سی ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے سب سے بڑے اور آخری معرکے میں نیوزی لینڈ نے کپتان کین ولیمسن کی جارحانہ بلے بازی کی بدولت مقررہ 20 اوورز میں 4 وکٹ کے نقصان پر 172 رنز بنائے۔

آسٹریلیا کی جانب سے کپتان ایرون فنچ 5 رنز کے مہمان ثابت ہوئے لیکن ڈیوڈ وارنر اور مچل مارش نے 92 رنز کی اہم شراکت قائم کرکے میچ نیوزی لیںڈ سے دور لے گئے، دونوں بلے بازوں نے نصف سنچریاں اسکور کیں

ڈیوڈ وارنر 53 رنز بناکر آؤٹ ہوئے تاہم مچل مارش وکٹ پر موجود رہے۔ نیوزی لینڈ کی جانب سے دونوں وکٹیں ٹرینٹ بولٹ نے حاصل کیں۔

اس سے قبل آسٹریلیا کی کپتان ایرون فنچ نے ٹاس جیت کر نیوزی لینڈ کو بیٹنگ کی دعوت دی۔ کیویز کی جانب سے سیمی فائنل کے ہیرو ڈیرل مچل بڑے معرکے میں ناکام رہے اور صرف 11 رنز بنانے کے بعد پویلین واپس لوٹ گئے۔ گلین فلپس 18 رنز کی اننگز کھیلنے میں کامیاب رہے

مارٹن کپٹل بھی بیٹنگ کے دوران بہت مشکل میں دکھائی دیے اور 35 گیندوں پر صرف 28 رنز کی اننگز کھیلنے کے بعد آؤٹ ہوئے تاہم کپتان کین ولیمسن نے جارحانہ انداز اپنائے رکھا اور اپنی نصف سنچری مکمل کی، وہ 48 گیندوں پر 85 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہوئے۔

آسٹریلیا کی جانب سے جوش ہیزل ووڈ نے زبردست بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے کیوی بلے بازوں کو خوب پریشان کیے رکھا اور 3 وکٹیں بھی حاصل کیں جب کہ ایک وکٹ ایڈم زمپا کے حصے میں آئی۔