بلوچستان گولڈ سمڈ لائن پر فورسز کا ڈرائیوروں سے جبری مشقت لینے کی اطلاعات

194

پاکستانی فورسز کی جانب سے ڈیورنڈلائن پہ خار دار تار لگانے کے بعد  مغربی بلوچستان کو مشرقی بلوچستان سے الگ کرنے والے گولڈ سمڈ لائن پہ بھی خار دار تار لگانے کا سلسلہ جاری ہے۔

ٹی بی پی کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق مغربی بلوچستان کے سرحد پہ پاکستانی فورسز کی جانب سے خار دار تار لگانے کا سلسلہ گذشتہ کئی عرصے سے جاری ہے ، جس کے بعد حالیہ دنوں یہ اطلاعات موصول ہوئی ہیں کہ علاقے میں روزانہ کی بنیاد پہ تیل کے کاروبار سے منسلک گاڑی ڈرائیوروں سے فورسز اہلکار زبردستی ان خار دار تاروں کو نصب کرنے کے لئے پہاڑی و پتھریلی علاقوں میں کھڈے کھدائی کا کام لے رہے ہیں۔

خیال رہے کہ گولڈ سمڈ لائن پہ خار دار تار لگانے سے قبل پاکستانی فورسز نے ڈیورنڈ لائن پہ بھی خاردار تار نصب کی تھی جسے کافی حد تک مکمل کرلیا گیا ہے ۔

یاد رہے گولڈ سمڈ لائن کے دونوں پار بلوچ آباد ہیں، بلوچ قوم پرست حلقوں کی جانب سے ان دونوں سرحدوں کو مصنوعی قرار دے کر ان پہ زبردستی خار دار تار لگانے کے عمل کی مذمت کی جارہی ہے۔