تربت: جوسک میں پنجاب جانے والے ٹریلر کو نذر آتش کیا ہے۔ بی ایل ایف

526

بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان میجر گہرام بلوچ نے میڈیا کو جاری میں کہا ہے کہ سرمچاروں نے کیچ کے مرکزی شہر تربت کے قریب جوسک میں سی پیک روڈ پر پنجاب جانے والے ٹریلر کو نذرآتش کر دیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ کل رات ساڑھے گیارہ بجے سرمچاروں نے کیچ کے علاقے جوسک میں سی پیک روڈ پر ناکہ بندی کرکے گاڑیوں کی چیکنگ کی اور پنجاب جانے والے ایک ٹریلر کو نذرآتش کردیا۔

ترجمان نے کہاکہ یہ ٹریلر گوادر پورٹ سے وسائل لیکر پنجاب جا رہا تھا۔ سرمچاروں نے ٹرالر کے آپریٹروں کو انسانی بنیاد پر تنبیہہ کے بعد چھوڑ دیا ہے۔

ترجمان نے کہاکہ قابض پاکستانی ریاست مختلف حربوں کے ذریعے بلوچ وسائل کو لوٹ کر پنجاب کو آباد کرنا چاہتا ہے۔ بلوچ سرمچار بلوچ قومی وسائل و سرزمین کی دفاع کیلے ہمہ وقت تیار ہیں۔ کسی کو یہ حق نہیں دیا جاسکتا کہ وہ بلوچ قوم کی رضامندی کے بغیر سرزمین کے وسائل کا سودا لگائے۔

مزید کہاکہ ہم نے بارہا سرمایہ کاروں کو تنبیہ کی ہے اور ایک بار پھر عالمی و علاقائی سرمایہ کاروں اور ٹریلرز مالکان کو تنبیہ کرتے ہیں کہ وہ ان منصوبوں کا حصہ نہ بنیں۔ بلوچستان حالت جنگ میں ہے۔ ان حالات تمام سرمایہ کار اپنی ہر قسم کی نقصان کا ذمہ دار خود ہوں گے۔

آخر میں کہاکہ بلوچستان لبریشن فرنٹ اس حملے کی ذمہ داری قبول کرتی ہے۔ یہ حملے بلوچستان کی آزادی تک جاری رہیں گے۔