سردار اختر مینگل کے کاغذات نامزدگی منظور

162

بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) کے سربراہ سردار اختر مینگل کو اپیلیٹ ٹربیونل نے الیکشن میں حصہ لینے کی اجازت دے دی۔

الیکشن ٹربیونل میں سردار اختر مینگل کی اپیل کی سماعت ہوئی۔

اس موقع پر وکیل ساجد ترین نے کہا کہ اختر مینگل نے اقامہ سفری مقاصد کے لیے حاصل کیا تھا، انہوں نے اقامے سے کوئی فائدہ حاصل نہیں کیا۔

اپیلیٹ ٹربیونل کی جانب سے سوال اٹھایا گیا کہ کیا اختر مینگل کے اقامے سے تنخواہ اور فائدہ حاصل کرنے کے ثبوت ہیں؟

اس موقع پر وکیل کا کہنا تھا کہ اختر مینگل کے اقامے سے تنخواہ اور مالی فائدے حاصل کرنے کا کوئی ثبوت نہیں اپیلیٹ ٹربیونل میں درخواست گزار کے وکیل کا کہنا تھا کہ اختر مینگل نے کاغذاتِ نامزدگی میں اقامے کا ذکر نہیں کیا تھا جو بدنیتی ہے۔

واضح رہے کہ سردار اختر مینگل کے کاغذاتِ نامزدگی مسترد کیے گئے تھے۔ ریٹرننگ افسر کا کہنا تھا کہ اختر مینگل کے پاس یو اے ای کا اقامہ ہے، کاغذات نامزدگی مسترد کرتے ہیں۔