کیچ: فورسز کے ہاتھوں ایک شخص لاپتہ

195

بلوچستان کے ضلع کیچ کے مرکزی شہر تربت سے پاکستانی فورسز نے گھر پر چھاپہ مارکر خاتون و بچوں کو شدید تشدد کا نشانہ بناکر نامعلوم مقام منتقل کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تربت کے علاقے آسکانی بازار سے پاکستانی فورسز نے پیر اور منگل کی درمیانی شب قریباً دو بجے ایک گھر پرچھاپہ مار کر خواتین اور بچوں کو تشدد کا نشانہ بناکر ایک نوجوان کو جبری گمشدگی کا شکار بناکر نامعلوم مقام منتقل کردیا ہے

لاپتہ ہونے والے نوجوان کی شناخت شبیر بلوچ ولد بشیر کے نام سے ہوئی ہے۔

لاپتہ شبیر کی فیملی نے اس کی جبری گمشدگی کی تصدیق کی ہے ۔اس سلسلے میں لاپتہ شبیر کی ہمشیرہ نے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو جاری کی ہے جس میں انہوں کہا کہ گذشتہ رات فورسز نے ہمارے گھر پر چھاپہ مارا،بھائی کوشدید تشدد کا نشانہ بنایا جس سے وہ بے ہوش گئی اور پھر فورسز انہیں گھسیٹ کر لے گئے ۔

انہوں نے کہا کہ جب میں نے پوچھا کہ کیوں میرے بھائی کواس طرح تشدد کرکے لے جا رہے ہو تو انھوں نے مجھے مارا پیٹھا اور گولیاں بھی چلائیں ۔

انہوں نے سول سوسائٹی انسانی حقوق کے اداروں سمیت عام شہریوں سے اپیل کی ہے کہ وہ ان کی آواز بنیں۔