لیاری میں بجلی اور گیس کا مسئلہ حد سے تجاوز کررہا ہے۔ بلوچ یکجہتی کمیٹی

49

بلوچ یکجہتی کمیٹی (کراچی) کی آرگنائزر آمنہ بلوچ اپنے جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ بجلی، گیس، پانی کچھ ایسی سہولیات ہیں جن کی عدم موجودگی زندگی اجیرن بنا دیتی ہے۔ موجودہ بے بنیاد اور شدید بجلی و گیس کی لوڈ شیڈنگ نے عوام کی زندگی کو اجیرن کر دیا ہے جس کے سبب لوگوں کو شدید تکلیف و بے سکونی کا سامنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ تمام بنیادی سہولیات کا حصہ ہیں اور ان کا شمار بنیادی حقوق میں ہوتا ہے۔ لمبے اور طویل بلوں کی ادائیگی کے بعد بھی لوگوں کو ان بلوں کی ادائیگی کی قیمت ادا نہیں کی جاتی اور ان کو کرب و بلا میں زندگی گزارنے پر مجبور کیا جاتا ہے۔

آمنہ بلوچ نے مزید کہا کہ کے۔الیکٹرک اور گیس انتظامیہ اپنے کام کو احسن طریقے سے انجام دے اور لوگوں سے بلوں کی وصولی کے بعد بھی ان کو ان کی بلوں کی ادائیگی کا حساب نہیں دیا جاتا۔

آمنہ بلوچ نے کہا کہ ہم کے۔الیکٹرک و گیس انتظامیہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ لوگوں کے بلوں کے ادائیگی کے بعد ان کو اس طرح سے اذیت و کرب میں مبتلا نہ کریں اور اپنے کام کو بہتر طریقے سے انجام دینے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ بصورت دیگر بلوچ یکجہتی کمیٹی (کراچی) اپنا آئندہ لائحہ عمل طے کرے گی اور سخت انتظامات کرے گی۔