بلیدہ، قلات :فورسز پر حملوں کی ذمہ داری بلوچ لبریشن آرمی نے قبول کرلی

554

بلوچ لبریشن آرمی کے ترجمان جیئند بلوچ نے میڈیا کو جاری کردہ اپنے بیان میں بلوچستان کے علاقے بلیدہ اور قلات میں پاکستانی فورسز پر حملوں کی ذمہ داری قبول کرلی ہے-

جیئند بلوچ نے اپنے بیان میں کہا بی ایل اے کے سرمچاروں نے بلیدہ کے علاقے گردانک میں گذشتہ رات قابض پاکستانی فوج کے اہلکاروں کو آئی ای ڈی حملے میں اس وقت نشانہ بنایا جب وہ دو موٹرسائیکلوں پر گشت کررہے تھے-

جیئند بلوچ کے مطابق دھماکے کی زد میں آنے سے دواہلکار ہلاک اور موٹر سائیکل تباہ ہوگئی۔

جیئند بلوچ کا کہنا تھا بی ایل اے کے سرمچاروں نے ایک اور حملے میں قلات کے علاقے جوہان میں قابض فوج کے کیمپ پر بھاری ہتھیاروں سے حملہ کیا جس کے نتیجے میں دشمن فوج کو جانی اور مالی نقصانات اٹھانے پڑے۔

جیئند بلوچ کے مطابق حملے کے بعد لیویز فورس کے اہلکاروں نے ہمارے سرمچاروں کا تعاقب کرنے کی کوشش کی منصوبہ بندی کے تحت پہلے سے مورچہ زن سرمچاروں نے لیویز اہلکاروں کو گھیرے میں لے لیا تاہم مقامی افراد کے ناطے لیویز فورس کے اہلکاروں کے ساتھ رعایت برتی گئی اور انہیں نشانہ نہیں بنایاگیا۔

جیئند بلوچ کا مزید کہنا تھا کہ بی ایل اے اس سے قبل بھی پولیس و لیویز فورس کو وارننگ جاری کرچکی ہے کہ وہ اجتماعی اور انفرادی حوالے سے بلوچ قومی تحریک کے سامنے کسی طرح کی رکاوٹ بننے سے گریز کریں، بصورت دیگر مذکورہ فورسز کو نشانہ بنایا جائے گا۔