ہزاروں نوجوانوں کا قافلہ ٹرالر مافیا کے خلاف مزاحمت کے لیے تیار ہے – ہدایت الرحمان بلوچ

118

بلوچستان کے ساحلی ضلع گوادر کے تحصیل پسنی میں جمعہ کے روز جماعت اسلامی بلوچستان کے صوبائی جنرل سیکرٹری مولانا ہدایت الرحمان نے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ غیرقانونی ٹرالنگ کی روک تھام کے لیئے حکومت ہر ماہی گیر کو لائسنس شدہ اسلحہ رکھنے کی اجازت دے۔

انہوں نے کہاکہ کہ حکومت اگر اجازت دے تو ایک ہزارنوجوانوں کا قافلہ ٹرالرمافیا کے خلاف مزاحمت کے لیئے تیار ہے۔

پسنی کے ماہیگروں سے اپنے خطاب میں انہوں نے کہاکہ ساحل کنارے آباد ماہی گیروں کو اب اپنے حقوق کے حصول کے لیئے متحد ہونا ہوگا اورماڑہ سے لیکر جیونی تک تمام ماہی گیر ٹرالر مافیا کے خلاف یکجاہ ہوکر اپنے سمندری حدودکو غیرقانونی ٹرالنگ کے سے پاک کریں۔

انہوں نے کہا کہ اگر ضلع گوادر کے سمندر کو غیرقانونی ٹرالنگ سے پاک نہیں کیا گیا تو ماہی گیر ایک مہینے تک مکران کوسٹل ہائی وے پر دھرنا دیکر اُسے بند کرینگے، کیونکہ اب ماہی گیر بہت تنگ آچکے ہیں ہم سے ہمارا روزگار چھین لیا گیا ہے۔

ہمارے نوجوان ذہنی ازیت کا شکار ہوچکے ہیں اور ہماری مائیں بہنیں آج سڑکوں پر بیٹھ کر دھرنا دینے پر مجبور ہوچکی ہیں یہ اب ہمارے لیے غیرت کا مسلہ بن چکا ہے اور اپنی غیرت کے لیئے ہم اپنا سرتک قربان کرنے کے لیئے گریز نہیں کرینگے۔

انہوں ے کہا کہ ہمارے ماہی گیروں کا سمندر آتے اور جاتے وقت توہین کیا جاتا ہے انہیں بے عزت کیا جاتا ہے اب ہم اس ذلت کی زندگی سے بیزار ہوچکے ہیں ہمیں یکجاہ ہونا ہے اور ہم ٹرالر مافیا اور بالادست قوتوں کو ضرورشکست دینگے تمام ماہی گیر جدوجہد کے لیئے تیار ہوجائیں ۔

انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی پاکستان گوادر کے ماہی گیروں کے ساتھ ہے جب تک سمندر غیرقانونی ٹرالنگ سے پاک نہیں ہوگا ہم سکون سے اپنے گھروں میں نہیں بیٹھینگے۔

انہوں نے کہاکہ جس دن حکومت اور محکمہ فشریز بلوچستان نے یہ اعلان کیا کہ غیرقانونی ٹرالنگ کا کنٹرول ان کے بس سے باہر ہے تو ضلع گوادر میں ایک ہزار نوجوانوں کا قافلہ ٹرالر مافیا اور بالادست قابض قوتوں کو سمندر برد کرنے کے لیئے تیار ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت غیرقانونی ٹرالنگ کی روک تھام کے لیئے ہر ماہی گیر کو لائسنس والا اسلحہ رکھنے کی اجازت دے کیونکہ ٹرالر والے ہمارے معصوم اور نہتے ماہی گیروں پر حملہ کرتے ہیں اور اُنھیں جانی نقصان پہنچاتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ٹرالر مافیا کو سمندر برد کرنے کے لیئے غیرت مند ماہی گیر ابھی بھی موجود ہیں جو ٹرالر مافیا کو نیست ونابود کرسکتے ہیں اور اپنے سمندر کو ڈاکوؤں کے چنگل سے چھڑا سکتے ہیں اور جماعت اسلامی ماہی گیروں کے ساتھ ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مولوی جب افغانستان میں امریکہ کو تباہ کرسکتے ہیں تو ٹرالر مافیا ان کے سامنے کچھ بھی نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ ترقی کے نام پر ہمیں دھوکہ دیا جارہا ہے ضلع گوادر کو سینگاپور بنانے والے بتائیں کہ کیا سینگاپور میں پانی اور بجلی گوادر کی طرح موجود نہیں ہے کیا سینگاپور کے لوگ اسی طرح زلیل وخوار ہیں وہ ترقی جس میں ہماری تذلیل ہواُس ترقی کو پنجاب لے جائیں۔

انہوں نے کہاکہ سمندر یہاں کے ماہی گیروں کی ملکیت ہے اور یہ سرزمین ہماری میراث ہے آج بلوچ خواتین سڑکوں پر احتجاج کررہی ہیں اور یہ احتجاج موٹروے اور اورجن ٹرین کے لیئے نہیں ہے بلکہ روزگار کے لیئے ہے۔