‎اوتھل کے کئی اسکولوں کوسرکاری کتب فراہم نہیں کیا گیا ہے – بی ایس اے سی

97

بلوچ اسٹوڈنٹس ایکشن کمیٹی کے مرکزی ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ بلوچ اسٹوڈنٹس ایکشن کمیٹی اوتھل زون  کے ایک وفد نے ضلع لسبیلہ کے علاقے او تھل کے گورنمنٹ مڈل سکول گوٹ چھوٹا سمیت مختلف اسکولوں کا دورہ کیا۔اس دوران طلباء سے تعلیم کے حوالے گفتگو کیا گیا جبکہ  اسکول کے ٹیچروں نے مختلف مسائل کی نشاندہی کی۔

انھوں نے کہا کے اوتھل کے تمام سکولز 9 اگست کو کھولے جا چکے ہیں لیکن ابھی تک طلباء کو سرکار کی جانب سے کتابیں نہیں  ملے ہیں اور کچھ ایسے بھی اسکول ہیں جن کے عمارت بوسیدہ حالت میں ہیں کھڑکیاں اور دروازہ نہ ہونے کے برابر ہیں جبکہ 25 سال ہو گئے ہیں ابھی تک چار دیواری نہیں  ہے نہ وہاں طلباء و طالبات کو پینے کے لیے صاف  پانی میسر ہے نہ بجلی کا نظام موجود ہے۔ طلباء اور اساتذہ اپنی مدد آپ کے تحت چندہ کر کے اپنے سہولیات پوری کرتے ہیں ساڑھے تین سال ہو گئے نہ ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر اور نہ کوئی دوسرےآفیسرز  وزیٹ کے لئے آئے ہیں ان تمام مسائل سے ضلعی انتظامیہ کی نااہلی ظاھر ہو جاتی ہے کہ وہ تعلیم کے حوالے سے بالکل ناکام ہو چکی ہے۔

ترجمان نے اس صورتحال کی بھرپور مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہم صوبائی حکومت اور وزیر تعلیم سے گزارش کرتے ہیں کہ وہ ان کا نوٹس لے کر غفلت برتنے والوں کے خلاف کارروائی کرے.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here