پنجگور : پروم سے ایک نوجوان پاکستانی فورسز کے ہاتھوں لاپتہ

89

بلوچستان میں گذشتہ دو دنوں سے بلوچ نوجوانوں کی گرفتاری کے بعد لاپتہ ہونے کا سلسلہ ایک مرتبہ پھر تیز ہوگیا ہے ۔

دی بلوچستان پوسٹ نیوز ڈیسک کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق پاکستانی فورسز اور خفیہ اداروں کی قائم کردہ مقامی ڈیتھ اسکواڈ کے اہلکاروں نے پنجگور کے علاقے پروم دِز سے ایک نوجوان کو گرفتار کرکے لاپتہ کردیا ۔

لاپتہ ہونے والے نوجوان کی شناخت ناصر ولد عیسیٰ کے نام سے ہوئی ۔

واضح رہے کہ گذشتہ اڑتالیس گھنٹوں کے دوران بلوچستان کے مختلف علاقوں سے پاکستانی فورسز اور خفیہ اداروں کے ہاتھوں دس سے زائد بلوچ نوجوان گرفتاری کے بعد لاپتہ ہوچکے ہیں ۔

بلوچستان میں ایک طرف جہاں عالمی وباء کورونا وائرس کی وجہ سے لوگ گھروں میں محصور ہیں ، تو دوسری جانب مختلف علاقوں میں پاکستانی فورسز کی گھر میں چھاپوں اور آپریشنوں میں تیزی آئی ہے ۔

دوسری آج ہی تربت سے بھی فورسز نے ایک پچاس سالہ شخص  دلپل ولد یار محمدکو گرفتار کرکے لاپتہ کردیا ۔

اسی طرح گذشتہ روز بھی گوادر اور بلیدہ سے بھی پانچ نوجوان لاپتہ ہوئیں جن میں دو سگے بھائی شامل ہیں ۔

بلوچستان میں لاپتہ افراد کی بازیابی کےلئے کوئٹہ و کراچی میں لواحقین کی جانب سے ایک دہائی سے احتجاج جاری ہے ۔