افغانستان : آرمی اہلکار نے اپنے 9 ساتھیوں کو قتل کردیا

71

افغانستان میں حالیہ دنوں فورسز میں اندرونی حملوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے ۔

دی بلوچستان پوسٹ نمائندہ کابل کے مطابق افغانستان کے صوبے زابل کے ضلع ارغنداب میں افغان آرمی کے اہلکار نے فائرنگ کرکے اپنے ہی دیگر 9 اہلکاروں کو قتل کردیا ۔

اپنے ساتھیوں کو قتل کرنے کے بعد ان کا اسلحہ ،گاڑی اور ڈگری سازو سامان لیکر طالبان کے ساتھ شامل ہوگیا ۔

زابل کے سیکیورٹی حکام نے واقعے کی تصدیق کردی ۔

افغانستان میں امریکہ و طالبان کے درمیان امن معاہدے پہ دستخط کرنے کے بعد بین الافغانی مذاکرات کا آغاز ہونا تھا تاہم افغان حکومت اور طالبان کی جانب سے مختلف امور پہ متفق نہ ہونے کے سبب تاحال مذاکرات کا آغاز نہیں ہوسکا ہے۔

طالبان کا مطالبہ ہے کہ پہلے ان کے پانچ ہزار قیدیوں کو رہا کیا جائے تب جاکر وہ افغان حکومت کے ساتھ دیگر امور پر مذاکرات کا آغاز کریں گے، دوسری جانب اشرف غنی حکومت پہلے مذاکرات اور پھر قیدیوں کی رہائی کی بات کررہے ہیں۔