نوشکی کے پہاڑی علاقوں میں فورسز کی آپریشن جاری

134

بلوچستان کے ضلع نوشکی میں فورسز کی جانب سے آپریشن کا آغاز کردیا گیا ہے جس میں فورسز کی بڑی تعداد حصہ لے رہی ہے۔

ٹی بی پی نمائندہ نوشکی کے مطابق نوشکی کے پہاڑی علاقوں منجرو، ریکو، دو سہہ، پاچنان سمیت دیگر علاقوں میں آج فورسز کی جانب سے آپریشن شروع کی گئی ہے جس میں فورسز کی زمینی فوج بڑی تعداد میں حصہ رہے رہی ہے۔

عینی شاہدین کے مطابق فورسز کی گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں پر مشکل قافلوں کو مذکورہ علاقوں کی جانب جاتے ہوئے دیکھا گیا ہے جبکہ مذکورہ علاقوں کو جانے والی راستوں پر ناکہ بندی کرکے آمد رفت کیلئے بند کردیا گیا۔

ذرائع نے ٹی بی پی کو بتایا کہ گذشتہ روز خاران کے علاقے لجّے اور بنڈالوں میں فورسز کی جانب سے آپریشن کی گئی جہاں دوران آپریشن فورسز نے مختلف اطراف میں مارٹر گولے فائر کیئے۔

علاقائی ذرائع کے مطابق فورسز کی جانب سے آبادیوں کو نشانہ بنایا گیا ہے تاہم کسی قسم کی جانی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوسکی ہے۔

سرکاری حکام کی جانب سے مذکورہ علاقوں میں آپریشن کی تاحال تردید یا تصدیق نہیں کی گئی ہے۔

خیال رہے دو روز قبل قلات کے پہاڑی علاقے گوربرات میں مسلح گروپوں کے درمیان بھی جھڑپ ہوئی تھی جس کے حوالے سے یونائیٹڈ بلوچ آرمی کے ترجمان نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ یو بی اے کے گشتی ٹیم نے علاقے میں ڈیتھ اسکواڈ کے کارندوں کی موجودگی کی اطلاع پر کاروائی کی جبکہ حملے کے نتیجے میں ڈیتھ اسکواڈ کے اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔