افغانستان: طالبان کی جانب سے تشدد میں کمی کا اطلاق شروع

108

افغانستان میں امریکہ اور طالبان کے درمیان تشدد میں کمی کا اطلاق شروع ہوگیا۔

افغان صدر نے گذشتہ رات اپنے ٹی وی خطاب میں کہا کہ طالبان کی جانب سے تشدد میں کمی کے آغاز کیلئے رات 12 بجے کا وقت مقرر تھا۔

افغان صدر اشرف غنی نے کہا کہ ہمیں محتاط انداز اپنانا ہوگا، ہماری فورسز صورتحال کو سنجیدگی سے لے رہی ہیں، طالبان کے علاوہ القاعدہ، داعش اور دیگر گروہوں کیخلاف کارروائیاں جاری رہیں گی۔

اس سے قبل امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ طالبان کے ساتھ افغانستان بھر میں تشدد کے واقعات میں کمی پر اتفاق ہوگیا ہے۔ اس سمجھوتے پر کامیابی سے عمل درآمد کیا گیا تو 29 فروری کو امن معاہدے پر دستخط کیے جائیں گے۔

دوسری جانب افغان طالبان نے بھی اپنے ایک رسمی بیان میں کہا کہ امریکہ کے ساتھ امن معاہدے پہ 29 فروری کو دستخط ہوگا جس کے بعد قیدیوں کی رہائی اور بین الفغانی بات چیت کا آغاز ہوگا اور پھر امریکی فورسز کے انخلاء اور افغان سرزمین کو دیگر قوتوں کے خلاف استعمال نہ کرنے کی متعلق اقدامات اٹھائے جائیں گے ۔