ہوشاپ: سی پیک روٹ پر ہونے والے حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہیں،بی ایل ایف

83

بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے ذریعے بات کرتے ہوئے کہا کہ 3 جولائی کو بی ایل ایف کے سرمچاروں نے ہوشاب میں چین پاکستان اکنامک کوریڈور (سی پیک) منصوبے کی روٹ پر پاکستانی فوج کے تین گاڑیوں کی گشتی ٹیم پر گھات لگا کر حملہ کیا۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ یہ حملہ ہوشاب آرمی کیمپ کے قریب ہی کیا گیا۔ حملہ میں نصف درجن سے زائد فوجی اہلکار ہلاک اور اس سے زاہد زخمی ہوئے ہیں جبکہ تینوں گاڑیوں کو شدید نقصان پہنچا۔

گہرام بلوچ کے مطابق اس روٹ پر کئی کیمپ اور چوکیاں قائم کی گئی ہیں تاکہ اس روٹ پر ہونے والی تعمیراتی کام کو تحفظ فراہم کی جا ئے تاہم بلوچ سرمچاروں نے پاکستانی فوج پر مسلسل حملے کرکے ثابت کیا کہ اس منصوبے میں بلوچ قوم کی کوئی مرضی و منشا شامل نہیں۔

ترجمان گہرام بلوچ نے کہا کہ بلوچ قوم پاکستانی قبضہ کے خلاف سر بہ کفن ہے اور ہماری جنگ بلوچستان کی آزادی تک جاری رہے گی۔