آواران سیکورٹی فورسز کے ہاتھوں ایک شخص گرفتار

25

آواران میں پاکستانی فورسز کے ہاتھوں گرفتار ہونے والا شخص آرمی کیمپ منتقل

دی بلوچستان پوسٹ نیوز ڈیسک کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق آواران میں فورسز نے سرچ آپریشن کے بعد ایک شخص کو گرفتار کرکے آرمی کے مرکزی کیمپ منتقل کر دیا ۔

تفصیلات کے مطابق آواران کے علاقے پیر اندر زیلگ میں فورسز نے سرچ آپریشن کے بعد واحد بخش ولد دین محمد سکنہ زومدان کو ان کے گھر کے باہر سے گرفتار کرکے اپنے ساتھ لے گئے ۔

واضح رہے بلوچستان میں گزشتہ چند ماہ سے لوگوں کو گرفتار کرکے لاپتہ کر نے کے عمل میں تیزی لائی جارہی ہے۔

یاد رہےکچھ روز قبل آواران کے اسی علاقے پیراندر ریلگ سے فورسز نے چھاپہ مار کر متعدد افراد کو گرفتار کرکے نامعلوم مقام پہ منتقل کردیاتھا ۔
گرفتار ہونے والے افراد میں الہی بخش ولد واحد، رحیم بخش ولد دلمراد، عبدالحئی ولد میر محمد ، عبدالسلام ولد میر محمد ، نورا ولد میر محمد ، سیری ولد ہارون،، جنگان ولد سیری ، عبدالواحد ولد ابراہیم، یار محمد ولد ابراہیم، سلیم ولد وشدل، نصیر ولد ابراہیم ، ایاز ولد نورا، شیر محمد ولد غلام محمد ، بشیر احمد امداد اور اعظم سمیت دیگر 20 شامل تھے ۔

علاقائی زرائع کے مطابق گرفتاری کے بعد تمام افراد کو فورسز نے آواران کے مرکزی کیمپ منتقل کردیاتھا ۔

اہل علاقہ نے الزام عائد کیاتھا کہ دوران چھاپہ فورسز نے پورے علاقے کو محاصرے میں لینے کے بعد خواتین و بچوں کو بھی تشدد کا نشانہ بنایا تھا ۔